کرکٹ سے جڑی ہرخبر اور زبردست ویڈیوز کے لیے ہمارا پیج لایک کریں
پاکستان بمقابلہ نیوزی لینڈ تین میچوں پر مشتمل ون ڈے سیریز کا پہلا میچ 17 ستمبر بروز جمعہ کو دوپہر 2 بجے راولپنڈی کے سٹیڈیم میں کھیلا جائے گا، نیوزی لینڈ کی ٹیم پاکستان پہنچ کر اپنے قرنطینہ کے دن مکمل کر رہی ہے


میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے قومی ٹیم کے کپتان بابراعظم نے نیوزی لینڈ کے خلاف ون ڈے ٹیم کے انتخاب پر مکمل اطمینان کا اظہار کرتے ہوئے دعوی کیا کہ متوازن ٹیم منتخب کی گئی ہے۔

بابر اعظم نے کہا کہ رمیز راجہ سے ملاقات خاصی مثبت رہی، انھوں نے اپنی سوچ اور حکمت عملی سے ہمیں آگاہ کیا۔ سرفراز احمد کو ڈراپ کرنے سے متعلق ایک سوال پر کپتان قومی ٹیم نے کہا کہ

اس سلسلے میں چیف سلیکٹر محمد وسیم وضاحت دے چکے ہیں۔ بابر اعظم کا کہنا ہے کہ سرفراز کے بارے میں انفرادی طور پر بات کرنا ممکن نہیں۔


ورلڈ ٹی 20 سے متعلق بابر اعظم نے کہا کہ بھارت کے خلاف اچھی کارکردگی دکھانے کے لیے پُر عزم ہیں، بھارتی ٹیم کافی عرصے سے ٹی 20 کرکٹ سے دور ہے، کوشش ہوگی کہ ورلڈ ٹی 20 میں بھارت کے خلاف کامیابی حاصل کریں۔

نیوزی لینڈ کے خلاف ون ڈے اسکواڈ سے بات کرتے ہوئے بابر اعظم نے کہا کہ سیریز کے لیے بہترین ممکنہ کھلاڑیوں کا انتخاب کیا گیا۔

بابار اعظم کا کہنا تھا کہ نیوزی لینڈ کی ٹیم کا پاکستان میں آنا خوش آیند ہے نیوزی لینڈ کی ٹیم کے سینیئر پلیئرز بھی سیریز کھیلنے کے لیے آتے تو اور بھی زیادہ اچھا ہوتا،

ذرایّع کے مطابق پاکستان کی ٹیم ان کھلاڑیوں پر مشتمل ہوگی
فخرزمان، امام الحق، کپتان بابر اعظم ،محمد رضوان ،سعود شکیل، افتخار احمد ، شاداب خان ، عثمان قادر، حارث رؤف ، حسن علی، اور شاہین شاہ آفریدی شامل ہیں، مزید پچ اور موسم دیکھ کر ہتمی فیصلہ کیا جائے گا.

اپنا تبصرہ بھیجیں