کرکٹ سے جڑی ہر خبر اور زبردست ویڈیوز کے لیے ہمارا پیج لایک کریں
قومی ٹیم کے سابق کپتان شعیب ملک کا کہنا ہے کہ پسند ناپسند پر قومی ٹیم منتخب ہوتی ہے۔ نجی ٹی وی سے خصوصی گفتگو کرتے ہوئے 39 سالہ آل راؤنڈر شعیب ملک نے کہا کہ مصباح الحق کو دو عہدے دئیے گئے تو میں نے حمایت کی تھی،


ان کے خلاف نہیں ہوں لیکن وہ قومی ٹیم کی کوچنگ کے لیے تیار نہیں ہیں۔ شعیب ملک نے کہا کہ دو بندے منتخب کرنا ہوں اور فون آجائے تو تیسری کرسی بھی رکھ دی جاتی ہے۔

انہوں نے کہا کہ فاسٹ بائولرز محمد عامر، وہاب ریاض اور عماد وسیم کی ٹیم کو ضرورت ہے۔ ایک سوال کے جواب میں شعیب ملک نے کہا کہ ٹی ٹونٹی ورلڈ کپ کھیلنا چاہتا ہوں اور

اس کے لیے بہت محنت کررہا ہوں۔ دوسری جانب وہاب ریاض کا کہنا تھا کہ ہمارے ہاں کھلاڑی کا ناکام ہونا برداشت نہیں کیا جاتا، نوجوان کھلاڑیوں کو سوچ سمجھ کر ٹیم میں ‏شامل کرنا چاہیے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں