کرکٹ سے جڑی ہرخبر اور زبردست ویڈیوز کے لیے ہمارا پیج لایک کریں
بابر اعظم بہتر ہورہا ہے، بابر کی گیم وہ نہیں ہے جو کھیل رہا تھا بلکہ اس کی گیم یہ ہے مگر اس پرتنقید ہوتی رہی ہے اور ہوتی رہے گی، وہ اپنی گیم کو بہتر کر رہا ہے،


بابر نے اب ویرات کوہلی کو بھی پیچھے چھوڑ دیا ہے اور یہ بتا دیا ہے کہ وہ ورلڈ نمبر ون ہے. دوسری بات یہ کہ اس نے اب یہ بتایا ہے کہ وہ 50 بالز پر 50 نہیں بلکہ 100بھی کرسکتا ہے اور

یہ ہے اس کی اصل گیم جس کی ہم توقع کرتے ہیں.یہ باتیں پاکستان کے سابق فاسٹ بائولر شعیب اختر نے اپنے آفیشل یو ٹیوب چینل پر کی ہیں. راولپنڈی ایکسپریس کہتے ہیں کہ

وہ اپنے آپ کو اب بہتر کر رہا ہے، پہلے وہ بہتر اسٹروک پلیئر نہیں تھا، میچ ونر نہیں تھا، دفاعی پلیئر تھا، پھر وہ ٹیسٹ اور ون ڈے کا پلیئر بنا، اب انہوں نے

ٹی 20 میں اپنے بلے سے اپنے ناقدین کو شٹ اپ کال دے دی ہے اور یہ کہ دیا ہے کہ میں نمبر ون بن گیا ہوں، میری پہلے وہ گیم نہیں تھی لیکن اب بن گئی ہے اور میں نے ثابت کردیا ہے کہ میں 50بالز پر 100کرسکتا ہوں.

شعیب اختر نے ساتھ ہی ایک اور چٹکی کاٹی ہے اور کہا ہے کہ سنچورین میں اگر 250کا ٹوٹل بھی ہوتا تو وہ بنالیا جاتا. پاکستان اعتماد بحالی کے پراسیس میں ہے، گزشتہ 15سال کی غلطیاں ٹھیک کر رہے ہیں،

مجھے لگتا ہے کہ بابر اعظم اور پوری ٹیم آج کل میرے پروگرام بہت دیکھ رہے ہیں، اس پر میں ان کا مشکور ہوں کہ جو جو میں کہتا جارہا ہوں، وہ کام ہوتا جا رہا ہے. شعیب کہتے ہیں کہ میں کہہ رہا تھا کہ پہلا پاور پلے فخر کو دیں لیکن بابر نے کہا نہیں میں نے پہلا پاور پلے لینا ہے تو

آج انہوں نے ثابت کردیا کہ میں ہی اس کا حقدار ہوں تو مجھے اچھا لگا ہے کہ وہ گریٹ اعظم بن گئے ہیں. انہوں نے اور رضوان نے اعلیٰ کلاس دکھائی.

میں بابر کی اور پوری ٹیم کی تعریف کروں گا اگر یہ اس طرح کھیلیں کیونکہ میں چاہتا ہوں کہ پاکستان اس سال بھارت میں ورلڈ ٹی 20 کا فائنل کھیلے.

اپنا تبصرہ بھیجیں