کرکٹ سے جڑی ہرخبر اور زبردست ویڈیوز کے لیے ہمارا پیج لایک کریں
چیف سلیکٹر محمد وسیم نے انھیں محدود صلاحیتوں کا حامل کھلاڑی قرار دیدیا۔ عماد وسیم ایک زمانے میں بورڈ کے فیورٹ کھلاڑی ہوا کرتے تھے، انھیں مستقبل کا کپتان بھی قرار دیا گیا مگر اب وہ حکام کی نظروں سے اتر سے گئے ہیں۔


محمد وسیم نے کہا کہ قومی ٹیم کوایسے آل راونڈر کی ضرورت ہےجو اننگز کے آغاز اور درمیانی اوورز میں میچ کی صورتحال کےمطابق باولنگ کرواسکے، اسی طرح بیٹنگ آرڈر میں کسی بھی نمبر پرتوقعات کا بوجھ اٹھا لے،

ایسی صورتحال میں عماد وسیم کی نسبت محمد نواز زیادہ کار آمد آل راﺅنڈر نظر آتے ہیں۔ محمد نواز نے ڈومیسٹک کرکٹ میں تسلسل کے ساتھ پرفارم کیا اور اس معیار پر پورا اترتے ہیں،

عماد وسیم کی صلاحیتیں محدود ہیں، ان کو اپنی کارکردگی بہتر بنانے کی ضرورت ہے، دونوں کی کارکردگی کا موازنہ کرتے ہوئے ہی محمد نواز کو ترجیح دی گئی ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں