میچ پھنس گیا تھا لیکن، حسن علی نے کلاس دکھائی، رمیز راجہ نےشاندار بات کہہ دی

87

کرکٹ سے جڑی ہرخبر اور زبردست ویڈیوز کے لیے ہمارا پیج لایک کریں
سابق کپتان رمیز راجہ کہتے ہیں کہ گلیکسی میں ایک ستارہ ہوتا ہے، سپر نووا سب سے زیادہ چمکتا ہے، حسن علی آج وہی تھے، باقی سب کو ماند کر دیا، گنجی،مردہ پچ پر انہوں نے کمال بائولنگ کی۔


راولپنڈی میں حسن علی نے کم بیک کرلیا، فارم، وکٹ لینے کی صلاحیت چیک ہورہی تھی، انہوں نے پروٹیز کو ان کے سیشن میں شکست دی، وہ فاسٹ بائولنگ کے ہنر مند ہیں لیکن

وہ بھی نہ چلے اور حسن علی نے سب کرشمہ کر دکھایا ہے۔ رمیز راجہ نے اپنے آفیشل یو ٹیوب چینل پرکہا ہے کہ آج میچ پھنس گیا تھا لیکن دوسری نئی بال کے بعد پاکستان واپس آیا،

حسن علی نے کلاس دکھائی ہے، انہوں نے 8سے 9 فرسٹ کلاس میچز کھیلے اور دیکھیں کہ اس کا کیا فائدہ ہواہے، ایسی پچ کہ جس پر اسپنرز کو چلنا چاہئے تھا، وہاں یہ چلے۔


بابر اعظم کی کپتانی کو بھی کریڈٹ دینا پڑے گا، جیت کا اچھا پھل ملا ہے۔ نیوزی لینڈ سے شکست کے بعد بہت،تنقید جاری تھی، فتح ضروری ہے، جیت سے ہی کرکٹ پر توجہ بڑھتی ہے۔ اس میچ سے سبق بھی ملا ہوگا کہ کیا اچھائیاں ہیں اور کیا برائیاں ہیں،

اوپنرز کے مسائل چل رہے ہیں لیکن عمران بٹ نے اعلیٰ کلاس دکھائی ہے کہ فیلڈنگ اچھی کی۔ رمیز راجہ کہتے ہیں کہ پاکستان کا اٹیک اوردفاع اس سیریز میں لاجواب ہے، ہوم کرکٹ کا یہی فائدہ ہوتا ہے کہ ٹیم جیتتی ہے۔ اسپنرز بھی قابل تعریف ہیں، پاکستان کی پرفارمنس بھی لاجواب ہے، ٹیم مبارکباد کی مستحق ہے۔

پاکستان نے جنوبی افریقا کے خلاف پنڈی ٹیسٹ 95رنز سے جیت کر 2میچز کی سیریز اپنے نام کرلی۔ پروٹیز کے خلاف مسلسل 2فتوحات پہلی بار ممکن ہوئی ہیں،28 واں ٹیسٹ تھا اور پاکستان کو چھٹی کامیابی ملی ہے،2003کے بعد سیریز اپنے نام کی ،مجموعی طور پر یہ دوسری سیریز جیتے ہیں۔