کیا وقار یونس اچھے کوچ نہیں؟جانیے ٹیسٹ کرکٹر سہیل خان کاسچ

150

کرکٹ سے جڑی ہرخبر اور زبردست ویڈیوز کے لیے ہمارا پیج لایک کریں
پاکستان سیدھے ہاتھ کے فاسٹ بولر سہیل خان نے سماء نیوز کے سپورٹس اینکر سے بات کرتے ہوئے بتایا کہ ایک بات یہ ہے کہ وقار یونس میرے جگہ گراؤنڈ میں جاکے نہ گیند کر سکتا ہے ٹھیک ہے نہ میرے لئے


نہ میرے لئے وہ نیٹ میں پریکٹس کر سکتے ہیں میرے لیے وہ جو کر سکتے ہیں وہ مجھے بتا سکتے ہیں کہ وہاں جا کر آپ نے کیسے پرفارم کرنا ہے. ٹیسٹ کرکٹر سہیل خان کا کہنا تھا

میں وقار یونس کے ساتھ انگلینڈ میں سائیڈ میچز کھیلتا رہا ہوں تو انھوں مجھے مکمل اچھے طریقے سے گائیڈ کرتے تھے مجھے بتاتے کہ آپ نے ان سونگ کیسے کرنا ہے

ایریا کون سا استعمال کرنا ہے کریز کہاں استعمال کرنا مجھے سب کچھ سب کچھ بہتر انداز سے بتاتے تھے۔ سہیل خان کا کہنا تھا کہ جب میں انگلینڈ میں ان کے ساتھ تھا


سہیل خان کاکہنا تھاکہ جب میں انگلینڈ میں ان کے ساتھ تھا تب وہ میرے لیے کونے میں ایک وکٹ رکھ کر میری پریکٹس کرا تے تھے مجھے بتا تے کے آپ نے اس وکٹ کو ہٹ کیسے کرنا ہے ان سونگ کہاں پر کرنی ہے ۔

ان کا کہنا تھا کہ اب اگر کوئی بولر گراؤنڈ میں جا کر وہ کچھ نہیں کر تا جو اسے پریکٹس مین سمجھایا جاتا ہے تو اس میں پھر وقار یونس کا قصور لگا نا ٹھیک نہیں ہو گا۔

ان کا کہنا تھا کہ میں وقار یونس سے بڑا مطمئن ہوں کیونکہ انھوں نے مجھے کافی کچھ سکھایا ہے۔ شعیب جٹ کی طرف سے کسی بولر کے ساتھ غلط کر نے کے حوالے سے

پو چھے گئے سوال کے جواب میں انھوں کہا مجھے یہ نہیں پتا اب ان کا باقیوں کے ساتھ کیسا معاملہ ہے مگر میرے ساتھ تو بہت اچھے رہے ہیں۔