محمد رضوان خود کو کپتان کے طور پر پیش کرنا بند کریں“ شعیب اختر وکٹ کیپر کی ”اوورایکٹنگ“ سے نالاں ہوگئے

131

کرکٹ سے جڑی ہرخبر اور زبردست ویڈیوز کے لیے ہمارا پیج لایک کریں
پاکستان کرکٹ ٹیم کے وکٹ کیپر بلے باز محمد رضوان کی ’اوورایکٹنگ‘ سابق کرکٹرز کو گراں گزرنے لگی اور پاکستان کے مایہ ناز سابق فاسٹ باﺅلر شعیب اختر کا کہنا ہے کہ وکٹ کیپرخود کو کپتان کے طور پر پیش کرنے سے باز رہیں۔


تفصیلات کے مطابق زمبابوے کیخلاف پہلے ون ڈے میچ کے دوران وکٹ کیپر محمد رضوان کھلاڑیوں کو کسی کپتان کی طرح ہدایات دیتے دکھائی دئیے اور دوسرے ون ڈے میچ میں بھی

کچھ ایسا ہی نظر آیا جبکہ اس سے قبل دورہ انگلینڈ کے دوران بھی ان کی یہ عادت نوٹ ہوئی تھی۔ حال ہی میں اظہر علی کی جگہ بطور ٹیسٹ کپتان بابر اعظم کے ساتھ ان کا نام بھی

مضبوط امیدوار کی حیثیت سے لیا جا رہا تھا، اس لئے وہ زیادہ جوش و خروش کے ساتھ خاص طور پر باﺅلرز کو ہدایات دینے میں مصروف دکھائی دئیے،


ان کی یہ حرکات سابق فاسٹ باﺅلر شعیب اختر کو کافی گراں گزریں جس کا انہوں نے میچ پر تبصرے کے دوران اظہار بھی کردیا۔ شعیب نے کہاکہ رضوان وکٹوں کے عقب سے کم باتیں کریں، انہیں کپتان کی طرح ہدایات دینے کی ضرورت نہیں ہے،

وہ باﺅلرز کو بہت زیادہ ہدایات دیتے ہوئے دکھائی دئیے کہ انہیں کہاں پر گیند کرنا چاہیے، رضوان کو صرف یہ بتانا چاہیے کہ بیٹسمین کس طرح کھیلنے کی کوشش کررہا ہے،

باقی باﺅلرز پر چھوڑدینا چاہیے۔ سرکاری ٹی وی پر تبصرے کے دوران شعیب اختر نے مزید کہا کہ یہ چیز کافی عجیب محسوس ہوئی اور مجھے کافی برا لگ رہا تھا۔