کوہلی کے بعد سٹیو سمتھ نے بھی محمد عامر کومشکل ترین باؤلرقرار دیدیا

146

کرکٹ سے جڑی ہرخبر اور زبردست ویڈیوز کے لیے ہمارا پیج لایک کریں
2010ء میں پاکستان کے خلاف میچز سے ٹیسٹ اور ٹی ٹونٹی کرکٹ کیریئر شروع کرنے والے آسٹریلین کرکٹر سٹیو سمتھ نے پاکستانی پیسر محمد عامر کو مشکل بولر قرار دیا تو ون ڈے اور ٹی ٹونٹی ٹیم کے کپتان بابر اعظم کے کھیل کی تعریف کی۔


کو رونا وائرس کی وبا کے پیش نظر دنیا بھر کے کرکٹرز کی طرح کھیل سے دور اور ذاتی زندگی تک محدود آسٹریلین کرکٹر نے سوشل میڈیا ویب سائٹ انسٹاگرام پر سوال و جواب کے

سیشن میں شائقین کی جانب سے پوچھے گئے متعدد سوالوں کے جواب دیے۔ ایک شائق کی جانب سے کیے گئے سوال میں آسٹریلوی بلے باز سے پوچھا گیا کہ وہ کون سا بولر ہے

جس کا سامنا کرتے ہوئے انہیں مشکل پیش آئی؟ سٹیو سمتھ نے اپنے جواب میں لکھا ’میرے خیال میں محمد عامر وہ باصلاحیت بولر ہے جس کا مجھے سامنا کرنا پڑا‘۔

اس سے قبل 2017ء میں ایک بھارتی پروگرام کے دوران ویرات کوہلی نے بھی محمد عامر سے متعلق ایسے ہی تاثرات کا اظہار کرتے ہوئے کہا تھا کہ

حالیہ دور میں پاکستانی باؤلر محمد عامر دنیا کے دو تین ٹاپ کے باؤلرز ا ور میرے کیریئر میں سامنا کیے گئے مشکل ترین باؤلرز میں سے ایک ہیں۔ گزشتہ کچھ عرصے سے اپنی بھرپور صلاحیتوں کا مظاہرہ نہ کر سکنے والے

محمد عامر ٹیسٹ کرکٹ سے رخصت لے چکے جب کہ آسٹریلیا کے خلاف تین ٹی ٹونٹی میچوں میں محض ایک وکٹ لے سکنے کے بعد سے مختصر فارمیٹ کی کرکٹ کی

پاکستانی ٹیم سے بھی باہر ہیں۔ پاکستان کرکٹ بورڈ کے سینٹرل کنٹریکٹ سے محروم کیے گئے محمد عامر اہلیہ کے امید سے ہونے کی وجہ سے دورہ انگلینڈ کے لیے اعلان کیے گئے

سکواڈ کا حصہ بھی نہیں ہیں۔ 31 سالہ سٹیو سمتھ سے بابر اعظم کے متعلق سوال کیا گیا تو ان کا کہنا تھا کہ ’وہ عمدہ کھلاڑی ہیں۔ بیٹنگ کرتے ہوئے ان کے پاس خاصا وقت ہوتا ہے‘۔